پروگرامز اور کانفرنسیں

تصویری رپورٹ/ نجف کربلا کے راستے میں اہل بیت (ع) عالمی اسمبلی کا موکب

تصویری رپورٹ/ نجف کربلا کے راستے میں اہل بیت (ع) عالمی اسمبلی کا موکب

کورونا وائرس کے پھیلاؤ کے باوجود اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی نے اربعین حسینی کے موقع پر تعلیمات اہل بیت(ع) کو زائرین تک پہنچانے کے لیے نجف کربلا کے درمیان اپنا موکب لگا کر اپنی کتابوں اور بروشرز کو زائرین میں تقسیم کرنا شروع کر دیا۔

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے زیر اہتمام مجازی دنیا میں فعال اربعینی موکبوں اور انجمنوں کی ہم فکری نشست

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے زیر اہتمام مجازی دنیا میں فعال اربعینی موکبوں اور انجمنوں کی ہم فکری نشست

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے زیر اہتمام مجازی فضا میں فعال اور ایکٹو اربعینی موکبوں اور انجمنوں کے سربراہاں کی ایک نشست کا انعقاد عمل لایا گیا جس میں امریکہ ، ایران ، بحرین ، پاکستان ، تھائی لینڈ ، ترکی ، کشمیر ، کینیا ، کوموروس ، سعودی عرب ، نائیجیریا اور ہندوستان سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی۔

تصویری رپورٹ/ اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی میں اربعین کے حوالے سے میٹنگ

تصویری رپورٹ/ اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی میں اربعین کے حوالے سے میٹنگ

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے دفتر قم میں موجودہ حالات کے پیش نظر اربعین کے پروگراموں کے حوالے سے ایک میٹنگ کا انعقاد عمل میں لایا گیا۔

پروفیسر فالک: اقوام متحدہ دنیا میں امن اور سلامتی لانے میں ناکام رہا

پروفیسر فالک: اقوام متحدہ دنیا میں امن اور سلامتی لانے میں ناکام رہا

 فلسطین میں انسانی حقوق کی تنظیم کے سابق رپورٹر نے " عالمی اتحاد بائے امن و انصاف ورچوئل کانفرنس " میں گفتگو کرتے ہوئے دنیا میں امن و انصاف کے قیام میں عالمی طاقتوں کی ناکامی کی طرف اشارہ کیا۔
پروفیسر رچرڈ فالک نے کہا، "یہ بدقسمتی کی بات ہے کہ اقوام متحدہ اپنے منشور میں موجود قوانین  پر عمل کرنے اور دنیا کو جنگوں سے محفوط رکھنے میں ناکام رہا ہے، اور سب سے بھی زیادہ بدقسمتی کی بات یہ ہے کہ اقوام متحدہ " معاشرتی بہبود اور معاشی و ثقافتی آزادی کے میدان میں بجائے اس کے کہ دنیا میں عدل و انصاف کے قیام کے لیے کوشاں رہے ظلم و جور کی ڈگر پر گامزن ہے۔
فالک نے مزید کہا: "جن ممالک نے یہ عالمی ادارہ تشکیل دیا وہ امن و انصاف کو فروغ دینے کا رجحان نہیں رکھتے اور خود اس کے قوانین پر پابند نہیں ہیں دوسری جنگ عظیم کے بعد بانچ جن ممالک نے دنیا میں نظم و انضباط کی برقراری کے لیے حق ویٹو حاصل کیا وہ سب سے زیادہ اس سے غلط فائدہ اٹھا کر اقوام متحدہ کے قوانین کو پامال کر رہے ہیں۔  
خیال رہے کہ اہل بیت (ع) عالمی اسمبلی کے تعاون سے ’عالمی اتحاد برائے امن و انصاف دوسری ورچوئل کانفرنس‘ کا انعقاد عمل میں لایا گیا جس میں دنیا کے بعض معروف دانشوروں نے شرکت کی۔

مصری شیعہ مفکر: مزاحمت ہی حقیقی امن کی دعوت کی بنیاد ہونی چاہئے

مصری شیعہ مفکر: مزاحمت ہی حقیقی امن کی دعوت کی بنیاد ہونی چاہئے

مصری شیعہ مصنف ڈاکٹر ’علی ابو الخیر‘ نے " عالمی اتحاد برائے امن و انصاف ورچوئل کانفرنس " میں مسلمانوں کے اتحاد و اتفاق کے بارے میں اظہار خیال کیا۔
انہوں نے کہا کہ امن و انصاف کا قیام اس وقت ممکن ہو سکتا ہے جب مسلمانوں میں اتفاق نظر پیدا ہو اور دشمنوں کا مقابلہ کرنے کے لیے مزاحمت کو اپنا شعار بنایا جائے۔
ڈاکٹر علی ابو الخیر نے کہا: ہم مسلمانوں کو اس صورتحال سے بخوبی آگاہ رہنا چاہیے جس میں ہم زندگی بسر کر رہے ہیں اور اسلام کے اصولوں اور پیغمبر اسلام صلی اللہ علیہ و آلہ و سلم کی رسالت کو اپنا مشن قرار دے کر اس راہ میں گامزن رہنا چاہیے۔
انہوں نے اس بات پر مزید زور دیا کہ مسلمانوں کو اپنے نظریات ایک دوسرے سے قریب کرنا چاہیے اور لاینحل مسائل جیسے مسئلہ فلسطین کے حوالے سے مسلمانوں کو یک مشت ہونا چاہیے۔
خیال رہے کہ اہل بیت (ع) عالمی اسمبلی کے تعاون سے ’عالمی اتحاد برائے امن و انصاف دوسری ورچوئل کانفرنس‘ کا انعقاد عمل میں لایا گیا جس میں دنیا کے بعض معروف دانشوروں نے شرکت کی۔

قومی سرحدوں کی بازیابی کے بعد ہی ملت فلسطین کو امن میسر ہو سکتا ہے: نیکولا ہیدو

قومی سرحدوں کی بازیابی کے بعد ہی ملت فلسطین کو امن میسر ہو سکتا ہے: نیکولا ہیدو

چلی یونیورسٹی کے پروفیسر نے ’عالمی اتحاد برائے امن و انصاف ورچوئل کانفرنس‘ سے گفتگو کرتے ہوئے ملت فلسطین کے حق میں عرب ممالک کی غداری کی سخت مذمت کی۔
نیکولا ہیڈو نے کہا کہ ملت فلسطین کے لیے اس وقت تک امن اور انصاف کا حصول ممکن نہیں ہے جب تک یہ قوم صہیونی ریاست اور اس کے اتحادیوں کی ذریعے ظلم و ستم کا شکار رہے گی۔
انہوں نے مزید کہا کہ عرب ممالک سعودی عرب، امارات اور بحرین ہمیشہ سے ملت فلسطین کے خلاف سازشوں میں مصروف رہے اور اب ان کی غداری کھل کر سامنے آ گئی وہ اپنے مال و ثروت سے اپنے مخالفین کو صفحہ ہستی سے مٹانے کی کوشش کر رہے ہیں۔
انہوں نے آخر میں کہا: فلسطینی عوام کے لیے امن و انصاف کے حصول کا واحد راستہ یہ ہے کہ انہیں ان کی زمین واپس لوٹا دی جائے اور وہ اپنی سرزمین میں مذہبی، سیاسی اور سماجی آزادی سے زندگی بسر کریں۔
خیال رہے کہ اہل بیت (ع) عالمی اسمبلی کے تعاون سے ’عالمی اتحاد برائے امن و انصاف ورچوئل کانفرنس‘ کا انعقاد عمل میں لایا گیا جس میں مختلف ممالک کے دانشورں نے حصہ لیا۔

تصویری رپورٹ/ شبہات کے جوابات کے مراکز کے ساتھ باہمی تعاون نشست

تصویری رپورٹ/ شبہات کے جوابات کے مراکز کے ساتھ باہمی تعاون نشست

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کے شعبہ بین الاقوامی امور کے تعاون سے ’سوالات و شبہات کے جوابات سے متعلق مراکز کے ساتھ باہمی تعاون‘ پر مبنی ایک نشست کا انعقاد کیا گیا جس میں اس سلسلے میں سرگرم ایران کے تمام اداروں کے سربراہان کو دعوت دی گئی اور ان کے کاموں سے متع

تصویری رپورٹ/ اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کی جانب سے محمد عرب کی مجلس ترحیم کا انعقاد

تصویری رپورٹ/ اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کی جانب سے محمد عرب کی مجلس ترحیم کا انعقاد

اہل بیت(ع) عالمی اسمبلی کی جناب سے الحاج محمد عرب کی ایصال ثواب کی مجلس آنلاین منعقد کی گئی۔

[12  >>  

عالمی اہل بیت اسمبلی

اہل بیت (ع) عالمی اسمبلی، ایک عالمی اور غیر سرکاری تنظیم کی حیثیت سے، عالم اسلام کی ممتاز شخصیات کے ذریعے تشکیل دی گئی ہے۔ اہل بیت علیہم السلام کو مرکز فعالیت اس لیے انتخاب کیا گیا ہے کیونکہ اسلامی تعلیمات میں قرآن کریم کے ہمراہ، اہل بیت اطہار علیہم السلام ایک مقدس مرکزیت کی حیثیت رکھتے ہیں جنہیں تمام مسلمان مانتے ہیں۔

اہل بیت (ع) عالمی اسمبلی کا آئین نامہ آٹھ فصلوں اور تینتیس شقوں پر مشتمل ہے۔

  • ایران - تهران - بلوارکشاورز - نبش خیابان قدس - پلاک 246
  • 888950827 (0098-21)
  • 888950827 (0098-21)

ہم سے رابطہ کریں

موضوع
دوستوں کوارسال کریں
خط
5-5=? سیکورٹی کوڈ